پشاور- پشتون تحفظ مومنٹ کے قائد منظور پشتین نے آج شام کو پشاور میں پی ٹی ایم کے رہنماؤں اور کارکنوں کے ساتھ منعقدہ اجلاس میں پشتونوں کے مسائل، حکومتی جرگہ کے پی ٹی ایم کے مذاکراتی عمل سمیت عید کے بعد شمالی وزیرستان کے سب ڈویژن رزمک میں ہونے والے جلسہ عام پر سیر حاصل گفتگو کی ۔ تورزن افغان نے پشتون نیوز کو بتایا کہ پی ٹی ایم کے قائد منظور پشتین اور پی ٹی ایم قیادت کے اعزاز میں پشاور کے ارباب واٹ میں مشہور اور ہردل عزیز گلوکار وحید اچکزئی جو ملی اور لوک گیتوں سے پشتونوں میں اتحاد، قومی آزادی کا ولولہ اور افغان نیشنل ازم کو پیدا کرنے کا عظیم فریضہ سرانجام دیتے رہتے ہیں کے حجرہ میں فرید خان آفریدی کی طرف سے افطار پارٹی کا اہتمام ہوا جسمیں میں منظور پشتین، محسین داوڑ، گل مرجان، سنا اعجاز سمیت دیگر رہنماؤں نے شرکت کی ۔  تورزن افغان نے بتایا کہ افطار پارٹی کے موقع پر موجود پی ٹی ایم قیادت کا اجلاس منعقد ہوا ۔ اجلاس میں مختلف مسائل پر گفتگو کی گئی اور پی ٹی ایم کے آئندہ سرگرمیوں پر روشنی ڈالی گئی ۔ تورزن افغان کا کہنا تھا کہ اجلاس کے دوران فاٹا انضمام کے حوالے سے بھی مختلف نظریات پیش ہوئے اور رہنماؤں نے اس ایشو پر بات چیت کی ۔ تاہم پی ٹی ایم نے فیصلہ کیا ہے کہ فاٹا انضمام کے ایشو میں مداخلت نہیں کرینگے کیونکہ اس ایشو پر پشتونوں کی رائے تقسیم ہے ۔ گزشتہ روز منظور پشتین نے کہا تھا کہ فاٹا انضمام کی اگر کچھ لوگ حمایت کرتے ہیں تو 50 فیصد سے زیادہ پشتون فاٹا کو خیبر پختونخوا میں شامل کرنے کی مخالفت کرتے ہیں لہذا پی ٹی ایم کو اس ایشو سے دور رکھتے ہوئے اپنے ایجنڈا پر فوکس کرینگے تاکہ پشتونوں کو اپنے آبائی اور صدیوں پرانی افغان وطن پر پر امن زندگی گزارنے کا حق دلوایا جاسکے اور پشتون سرزمین پر جنگ کا خاتمہ ہو ۔ واضح رہے کہ منظور پشتین کی قیادت میں تمام پشتون علاقوں کے لوگ بغیر کسی رنگ و قومیت کے شامل ہیں تاہم پختونخوا ملی عوامی پارٹی کے رہنماؤں اور کارکنوں نے دن رات ایک کرکے اس تحریک کی کامیابی اور جلسوں کی رونقوں میں اب تک اہم کردار ادا کرتے ائے ہیں جسکی وجہ سے پختونخوا ملی عوامی پارٹی کی حمایت اور مقبولیت میں دن بدن اضافہ ہوتا رہتا ہے ۔

Comments